Article image..
Article image..
ڈاکٹر غازی اگرچہ متبحر عالم دین تھے مگر ان کی شہرت بطور ایک دانشور کے زیادہ تھی ۔ ۔ ۔ ۔ ڈاکٹر غازی صاحب ان چنیدہ صاحبان دانش میں سے ہیں جن کا مطالعہ متنوع اور وسیع ہے۔ وہ زیادہ تر عربی کتابوں کا مطالعہ کیا کرتے تھے۔ فرنچ جاننے کی وجہ سے ان کے مطالعہ میں مزید وسعت ہوگئی، خاص کر مستشرقین کی تحریریں براہ راست ان کے مطالعہ میں آئیں۔ وسعت مطالعہ اور تفکر سے وسعت نظری پیدا ہوتی ہے۔ چنانچہ ڈاکٹر صاحب کے ہاں وسعت نظری اور رواداری پیدا ہوگئی۔ وہ حنفی تھے لیکن متشدد و کٹر قسم کے حنفی نہیں۔ ان سے سوال کیا گیا کہ کیا حنفی کی نماز شافعی کے پیچھے ہو جائے گی، بعض لوگ منع کرتے ہیں۔ اس سوال کے جواب میں وہ کہتے ہیں: فقہ اسلامی میں ایسا کوئی حکم موجود نہیں ۔ ۔ ۔ ‘‘
قرآن / علوم قرآن
حدیث و سنت / علوم الحدیث
اسلامی شریعت
دین و حکمت
سیرت و تاریخ
فقہ / اصول فقہ
دین اور معاشرہ
اسلام اور عصر حاضر
عالم اسلام اور مغرب
اسلامی تحریکات اور حکمت عملی
جہاد / جہادی تحریکات
اسلام اور سیاست
پاکستان ۔ قومی و ملی مسائل
مسلم مکاتب فکر ۔ باہمی مکالمہ
نقد و نظر
آراء و افکار
تعلیم و تعلم / دینی مدارس
مسلم مفکرین
شخصیات
حالات و واقعات
حالات و مشاہدات
مشاہدات و تاثرات
الشریعہ اکادمی
اخبار و آثار
مکاتیب
ادبیات
تعارف و تبصرہ
امراض و علاج